خبریں

سی ٹی ڈی کا بونیرسے دو اہم ترین طالبان کنانڈر گرفتار

پشاور(ان لائن)کاونٹر ٹیرارزم ڈیپارٹمنٹ ملاکنڈریجن کی اہم کاروائی, تحریک طالبان سوات کا اہم مطلوب دہشت گرد کمانڈرحسین علی عرف عبداللہ عرف ازبک گرفتار

مذکورہ دھشتگرد پولیس اہلکاروں کو شھید کرنے اور دیگر کئی دھشتگرد کاروائیوں میں ملوث تھا۔دہشت گرد کی سر کی قیمت تیس لاکھ روپے مقرر تھی

تفصیلات کے مطابق محکمہ انسداد دہشتگردی مالاکنڈ ریجن نے بدوران انٹیلی جنس بیسڈ آپریشن دہشت گرد کمانڈر حسین علی عرف عبداللہ عرف ازبک ساکن بشونئی ضلع بونیر کو گرفتار کرکے دہشت گرد کے قبضے سے ایک عدد پستول 30 بور بمعہ2 عدد میگزین 10 عدد کارتوس اور ایک عدد ہینڈ گرینڈ برآمد کیا۔ گرفتار دہشت گرد مختلف قسم کے دہشت گردی مقدمات میں CTD پولیس اور مقامی پولیس ضلع بونیر کو مطلوب تھا جس کے سر پر انعامی رقم تیس لاکھ روپے مقررتھی۔

مذکورہ دہشتگرد نے سال 2016 میں پولیس اہلکارکنسٹیبل فضل باری کو بعد از اغواء شہید کیا تھا جبکہ سال 2020 میں دیگر دہشت گردوں کے ساتھ ملکر دوران آپریشن آرمی اور ایلیٹ فورس اہلکاروں پر فائرنگ کرکے جس میں 02 اہلکاران شہید ہوئے تھے۔اسطرح سال 2010 میں بغرض تخریب کاری سپین جماعت بلو خان درہ کے پیوست میں بم نصب کر رکھا تھا۔ گرفتار دہشت گرد کمانڈر کے خلاف انسدادی دہشت گردی ایکٹ کے تحت مقدمہ درج رجسٹر کرکے مذکرہ سے انٹاروگیشن جاری ہے۔ مذید اہم انکشافات متوقع ہے۔

8 total views, 8 views today

Show More

Related Articles

جواب دیں

Back to top button
Close
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker